Warning: Use of undefined constant WPLANG - assumed 'WPLANG' (this will throw an Error in a future version of PHP) in /home2/qaumtv/public_html/wp-content/plugins/LayerSlider/classes/class.km.autoupdate.v3.php on line 73
مجھ پر ہاتھ ڈالنا آسان کام نہیں،اگر میرے خلاف یہ کام ہوا تو مولانا فضل الرحمن کے دھماکے دار بیان نے سیاسی ایوانوں میں کھلبلی مچادی | Qaum Tv
Select your Top Menu from wp menus

مجھ پر ہاتھ ڈالنا آسان کام نہیں،اگر میرے خلاف یہ کام ہوا تو مولانا فضل الرحمن کے دھماکے دار بیان نے سیاسی ایوانوں میں کھلبلی مچادی

15

اسلام آباد(نیو زڈیسک)جمعیت علماء اسلام (ف) کے سربراہ مولانا فضل الرحمان کا کہنا ہے کہ مجھ پر ہاتھ ڈالنا آسان کام نہیں ہے اگر نیب نے مجھ پر کوئی کیس کھولا تو وہ انہی کے گلے پڑے گا۔تفصیلات کے
مطابق مولانا فضل الرحمن سے سوال کیا گیا کہ کیا کوئی ایسا امکان موجود ہے کہ مولانا فضل الرحمان پر بھی نیب کوئی کیس کھولے اور ان کو حوالات میں بند کر دے۔جس کا جواب دیتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ اللہ نہ کرے۔میرے اوپر اگر کوئی چیز آئی تو وہ نیب کے ہی گلے پڑے گی۔میں بہت مضبوط آدمی ہوں اور سوال ہی نہیں پیدا ہوتا کہ مجھ پر نیب کوئی کیس کھولے۔مولانا فضل الرحمان نے مزید کہا کہ میرے خلاف کچھ بھی نہیں ہے اور اگر مجھے گرفتار کرنا ہے تو میرے خلاف کوئی جعلی کیس ہی بنانا پڑے گا۔جب کہ سابق صدر آصف علی زرداری کی گرفتاری سے متعلق گفتگو کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ اس ملک میں کچھ بھی ہو سکتا ہے اس لیے آصف زرداری کی گرفتاری بھی ممکن ہے۔خیال رہے ہ مولانا فضل الرحمان کچھ روز قبل یہ بھی کہہ چکے ہیں کہ ہم 30لاکھ افراد کو اسلام آباد لے جا کر اسے جام کردیں گے۔سرگودھا میں منعقدہ جلسے سے خطاب کرتے ہوئے مولانا فضل الرحمان نے کہا کہ ہماری جنگ آمریت کے خلاف ہے ہم جمہوری قوتوں کو ملک اورجمہوریت بچانے کی دعوت دیتے ہیں۔جلد اسلام آباد جائیں گے اور اسے جام کردیں گے ۔ جب 30لاکھ افراد اسلام آباد جائیں گے تو دیکھیں گے کہ حکومت کیسے چلتی ہے۔ ہم ملک بھر میں ملین مارچ کے عنوان سے اجتماعات کررہے ہیں ۔ متحدہ مجلس عمل آج 10واں مارچ کررہے ہے ۔ 2018کے عام انتخابات میں دھاندلی کرکے جعلی حکومت کو لایا گیا۔ آج اس ملک سے اخلاق اور تہذیب کا جنازہ نکالا جارہا ہے اگر کسی قوم سے اخلاق چھین لیا جائے تو اسے غلام بنانا آسان ہوجاتا ہے۔ مولانا فضل الرحمان نے کہا کہ جس سڑک کا افتتاح ہم نے ژوب سے کیا تھا حکومت نے اس کاافتتاحکوئٹہ سے کردیا ہے۔

About The Author

Related posts